وزیر اعلی محمود خان کا ایڈہاک ٹیچرز کے لئے اہم اقدام، تمام ایڈہاک ٹیچرز کو ان کے تاریخ تقرری سے مستقل کرنے کا اعلان۔

پشاور: وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان سے ینگ ٹیچرز ایسوسی ایشن کے وفد کی ملاقات۔
وزیر اعلی محمود خان کا ایڈہاک ٹیچرز کے لئے اہم اقدام، تمام ایڈہاک ٹیچرز کو ان کے تاریخ تقرری سے مستقل کرنے کا اعلان۔
وزیر اعلی محمود خان کا مستقل ہونے والے ان اساتذہ کی سنیارٹی کو بھی تاریخ تقرری سے برقرار رکھنے کا اعلان۔
مستقل ہونے والے اساتذہ کے سالانہ انکریمنٹس کو بھی بنیادی تنخواہ میں شامل کیا جائے گا- ایڈہاک اساتذہ کی مستقلی کی سمری پر دستخط کر دئے ہیں- ایڈہاک اساتذہ کی مستقلی کا بل جلد صوبائی کابینہ کی منظوری کے لئے پیش کیا جائے گا- صوبائی کابینہ کی منظوری کے بعد بل صوبائی اسمبلی کو بھیجا جائے گا- صوبائی حکومت ایڈہاک اساتذہ کو مستقل کرنے کی منصوبہ بندی پہلے سے کر چکی تھی جس کا بجٹ میں اعلان بھی کیا گیا تھا- اس سلسلے میں ایڈہاک اساتذہ کا احتجاج بلا جواز تھا- شعبہ تعلیم شروع دن سے صوبائی حکومت کی ترجیح رہی ہے۔ دیگر تعلیمی اصلاحات کے ساتھ ساتھ میرٹ کی بنیاد پر ہزاروں نئے اساتذہ بھرتی کیے گئے ہیں۔ حتمی مقصد صوبے کے تعلیمی معیار کو بہتر بنانا ہے۔ قابل اور اہل لوگوں کو میرٹ کے ذریعے روزگار کی فراہمی اور ملازمت کا تحفظ صوبائی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے۔ نئے بجٹ میں 63 ہزار ایڈہاک ملازمین کو مستقل کیا جا رہا ہے جن میں 58 ہزار اساتذہ ہیں: وزیراعلی محمود خان
ینگ ٹیچرز ایسو ایشن کے نمائندوں کا تاریخ تقرری سے ایڈہاک اساتذہ کی مستقلی کے اعلان پر وزیر اعلی محمود خان کا شکریہ۔
تعلیم کے شعبے کی ترقی کے لئے تحریک انصاف حکومت نے بے مثال اقدامات اٹھائے ہیں- تعلیم کے شعبے میں تحریک انصاف حکومت کے اصلاحاتی اقدامات قابل تحسین ہیں: ینگ ٹیچرز ایسوسی ایشن

CM confirmed Adhoc teachers permanent

#CM

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں