پاک اکیڈمی آف ہندکو لینگویج اینڈ لٹریچر(PAHLL) کے سرپرست اعلیٰ واحد سراج نے ہندکو کو پارلیمانی زبان قراردینے کی قرارداد کی منظوری خراج تحسین

پاک اکیڈمی آف ہندکو لینگویج اینڈ لٹریچر(PAHLL) کے سرپرست اعلیٰ واحد سراج نے صوبائی اسمبلی میں ہندکو کو پارلیمانی زبان قراردینے کی قرارداد کی منظوری پر ہزارہ سے منتخب اراکین اسمبلی اور اسپیکر مشتاق احمد غنی کوخراج تحسین پیش کیا ہے۔ میڈیا کو جاری کردہ بیان میں واحد سراج نے کہا کہ ہندکو ایک درخشاں مستقبل کی حامل زبان ہے جو اپنے ثقافتی اور ادبی حوالے سے خاص و عام میں نہ صرف مقبول ہے بلکہ ملکی اور بین الاقوامی سطح پر بولی اور سمجھی جاتی ہے۔ آج دنیا کے کونے کونے میں ہندکو بولنے والے لوگ موجود ہیں جو اس بات کا ثبوت ہے کہ یہ زبان بتدریج ارتقا سے گزر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی سطح پر ہندکو کی ترویج کے لیے اقدامات اس لیے بھی ناگزیر ہیں کہ ہزارہ کی ثقافت کوبطریق احسن اجاگر کیا جاسکے۔ واحد سراج نے اس ضمن میں ہزارہ سے منتخب نمائندوں بالخصوص ایم پی اے نذیر عباسی اور اسپیکر صوبائی اسمبلی مشتاق احمد غنی کی کوششوں کو سراہا۔ پاہل کے سرپرست نے امید ظاہر کی کہ خیبر پختونخوا اسمبلی میں قرارداد کی منظوری کے بعد ہندکو کوپارلیمانی زبان زبان قرار دینے کا بل بھی عنقریب منظو ر ہوگا۔ انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ پاک اکیڈمی آف ہندکو لینگویج اینڈ لٹریچر کے پلیٹ فارم سے ہندکو زبان و ادب کے فروغ کے لیے کوششیں جاری رکھی جائیں گی۔

Hindko language

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں