فیصل زمان نے ایبٹ آباد کی خصوصی عدالت سے ضمانت قبل ازگرفتاری کروالی

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی رہنما ملک طاہر اقبال قتل کیس میں‌ ممبر صوبائی اسمبلی و چئیرمین اسٹینڈنگ کمیٹی لاء اینڈ ہیومن رائٹس فیصل زمان نے ایبٹ آباد اے ٹی سی کی خصوصی عدالت سے ضمانت قبل ازگرفتاری کروالی، عدالت کا فیصل زمان کو 21 دسمبر2020 کو دوبارہ پیش ہونے کا حکم۔
عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو میں فیصل زمان کا کہنا تھا کہ میں بے گناہ ہوں، اور ایک سازش کے تحت مجھے پھنسایا جارہا ہے,
ممبر صوبائی اسمبلی و چئیرمین اسٹینڈنگ کمیٹی لاء اینڈ ہیومن رائٹس فیصل زمان کا کہنا تھا کہ پولیس کی چند کالی بھیڑوں نے پیسہ لے کر مجھے اس کیس میں ملوث کیا ہے، مجھے عدالتوں پر مکمل اعتماد ہے اور مجھے ضرور انصاف ملے گا, فیصل زمان کو گرفتار ملزم کے عدالتی بیان کی روشنی میں مقدمہ میں شامل کیا گیا ہے، جبکہ فیصل زمان نے ملتان ہائی کورٹ سے سفری ضمانت کروا رکھی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں