ملتان بورڈ میں 1050 نمبر لینے والا 16 سالہ یتیم بچہ محمد حذیفہ جو شربت بیچنے والی ایک ریڑھی پر ملازمت کرنے والے کوگورنمنٹ کالج یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی جانب سے وظیفے کا اعلان

ملتان بورڈ میں 1050 نمبر لینے والا 16 سالہ یتیم بچہ محمد حذیفہ جو شربت بیچنے والی ایک ریڑھی پر ملازمت کرنے والے کوگورنمنٹ کالج یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی جانب سے وظیفے کا اعلان

تفصیلات کے مطابق میٹرک سائنس کے امتحانات میں ملتان بورڈ میں 1050 نمبر لینے والا 16 سالہ یتیم اور بے گھر بچہ محمد حذیفہ جو غلہ منڈی ملتان کے مین گیٹ کے پاس شربت بیچنے والی ایک ریڑھی پر ملازمت کرنے پر مجبور ہے۔ مگر اطمینان بھری مسکراہٹ اس کے لبوں اور آنکھوں پر ہر لمحہ رقصاں رہتی ہے۔ محمد حذیفہ 5 بہن بھائیوں اور والدہ کا واحد کفیل ہے مگر یہ اندازہ لگانا مشکل نہیں کہ اسے روزانہ کتنی اجرت ملتی ہو گی۔۔۔ محمد حذیفہ کو سکالر شپ پر ایک پرائیویٹ کالج میں داخلہ تو مل گیا ہے مگر زندگی کا کٹھن سفر ابھی شروع ہوا ہے ۔۔

گورنمنٹ کالج یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی جانب سے وظیفے کا اعلان کردیا گیا۔

ونیورسٹی فیس اور ہاسٹل کے اخرجات بھی برداشت کرےگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں