Peshawar Journalists Protest

Peshawar Journalists Protest

protestKhyber Union of Journalists and Peshawar Press Club protested against the insulting the Female Journalist in KPK Assembly

خیبر یونین آف جرنلسٹس اور پشاور پریس کلب نے اسمبلی میں خاتون صحافی سے عملے کی بدتمیزی اور اس سے متعلق خیبر پختونخوا اسمبلی کے وضاحتی بیان کو اشتعال انگیز قرار دیتے اسے مسترد کیا اور اسمبلی سے غیر معینہ مدت کے لئے مکمل بائیکاٹ کا اعلان کیا۔اس بات کا فیصلہ بدھ کوصحافیوں کے نمائندہ تنظیموں کے مشترکہ اجلاس میں کیا گیا۔خیبر یونین آف جرنلسٹس کے صدر نثار محمود کی زیر صدارت اجلاس میں یونین ، پریس کلب ، پریس گیلری کے عہدے داروں اور ٹی وی چینلز کے بیورو چیف نے شرکت کی ۔اجلاس میں اسمبلی کے وضاحتی بیان کا تفصیلی جائزہ لیا گیااور متفقہ طور پر اسے من گھڑت، اشتعال انگیزاور حقائق کے منافی قرار دیا گیا۔ اجلاس میں واضح کیا گیا کہ اسمبلی کے وضاحتی بیان میں حقائق کو توڑ مروڑ کر پیش کیا گیا ہے۔ خاتون صحافی کے ساتھ بدتمیزی اور اسے حراساں کرنے میں اسمبلی کے عملے نے پہل کی جبکہ انہیں دھکے دے کر اپنے پیشہ ورانہ فرائض کی انجام دہی سے روکا گیا۔ اسمبلی عملے نے اصل حقائق کی پردہ پوشی کے لئے من گھڑت بیان بازی کا سہارا لیا اور اسے حکومت صحافتی برادری اور عوام کے انکھوں میں دھول جھونکنے کے مترادف قراردیا۔ اجلاس میں سیکرٹری اسمبلی کے ہتک آمیز، غیر شائستہ رویے اور خاتون صحافی سے ماتحت عملے کی بدتمیزی کے خلاف اسمبلی اجلاس سے غیر معینہ مدت کے لئے مکمل بائیکاٹ کا فیصلہ کیا گیا۔ صحافتی تنظیموں نے واضح کیا کہ متفقہ فیصلے کی خلاف ورزی کرنے والے یونین اور پریس کلب کے اراکین کے خلاف بھی سخت کاروائی کی جائے گی۔ اجلاس میں اس بات کا بھی جائزہ لیا گیا کہ حکومت اور صحافتی برادری کے درمیان اس ناخوشگوار واقعے کے تصفیے کے لئے کوششیں جاری تھیں تاہم اسمبلی سیکرٹریٹ نے ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت مصالحتی کوششوں کو سبوتاژ کرکے معاملے کو مزید پیچیدہ کردیا ہے ۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیاکہ صحافیوں کے مطالبات تسلیم نہ کئے جانے کی صورت میں احتجاج کا دائرہ کار پھیلایا جائے گا۔ 
نثار محمود صدر خیبر یونین آف جرنلسٹس
طارق آفاق جنرل سیکرٹری خیبر یونین آف جرنلسٹس

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں