ہزارہ پولیس کی بھکاریوں کیخلاف مہم جاری، 25بھکاریوں کیخلاف مقدمات درج

ایسے عناصر کیخلاف کارروائیاں جاری رکھی جائے گی جو بہانے بنا کر لوگوں سے پیسے بٹولنے میں لگے ہوئے ہیں، قاضی جمیل الرحمن
بھکاریوں کے گروہ کی سرپرستی کرنیوالوں کیخلاف بھی قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی، ڈی آئی جی ہزارہ
ایبٹ آباد: ہزار ہ پولیس نے ڈی آئی جی ہزارہ قاضی جمیل الرحمن کی خصوصی ہدایت پر ہزارہ ریجن کے تمام اضلاع میں بھکاریوں کے خلاف جاری مہم کے دوران کاروائیاں کرتے ہوئے مقدمات درج کرتے ہوئے 25 مجرمان کو گرفتار کیا گیا ہے۔ گذشتہ ماہ عوامی شکایات اور بھکاریوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے باعث ہزارہ ریجن کے تمام اضلاع میں بھکاریوں کے خلاف ریجن کی سطح پر مہم کا آغاز کیا گیا تھا۔عادی اور پیشہ ور بھکاری جو کہ کسی معذوری کے بغیر بھیک مانگتے ہیں اور اپنے آپ کو بھیک مانگنے کی غرض سے معذوری کا بہانہ بنا کر لوگوں کو تنگ کرنے کے ساتھ ساتھ بھیک مانگتے ہیں اور ایسے عناصر جو بلاوجہ اپنی سستی و کائلی کی وجہ سے کام نہ کرنے کے بہانے بنا کر لوگوں سے پیسے بٹولنے میں لگے ہوئے ہیں ایسے عناصر کے خلاف کریک ڈاؤن کیا گیااس کریک ڈاؤن میں ہزارہ بھر میں پیشہ ور، بہانے سے پیسے ہتھیانے والے اور بچوں کو اس گناؤنے کام میں جبراً استعمال کرنے والے اشخاص کے خلاف کاروائیاں کی گئی ہیں اور 25افراد کیخلاف مقدمات درج کرکے انکو گرفتار کرکے پابند سلاسل کیا گیا۔ اس حوالے سے ڈی آئی جی ہزارہ نے کہا کہ تمام ڈی پی اوز اپنے اپنے اضلاع میں اس مہم کو مزید تیزی سے جاری رکھے اور ایسے بڑے نیٹ ورک اور گروہ کی سرپرستی کرنیوالوں کیخلاف بھی قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے جو معصوم بچوں اور بچیوں سے زبردستی بھیک منگوانے والے یا بچوں کو بیمار یا معذور ظاہر کرکے بھیک مانگتے ہیں اور منگواتے ہیں ایسے لوگ کسی بھی معافی کے مستحق نہیں ایسے گروہوں کیخلاف کارروائیاں عمل میں لائیں جہاں پیشہ ور بھکاریوں کے ٹھکانے ہیں ان جگہوں کی سرچ آپریشن کیا کرے اور وہاں پر مقیم تمام افراد کا بائیو ڈیٹا اپنے پاس محفوظ رکھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں