ایک سے زائد پراپرٹی پر سالانہ ٹیکس جبکہ پراپرٹی کی فروخت پر 15 فیصد تک ٹیکس عائد

اسلام آباد: حکومت پاکستان نے وفاقی بجٹ میں ایک سے زائد پراپرٹی پر سالانہ ٹیکس جبکہ پراپرٹی کی فروخت پر 15 فیصد تک ٹیکس عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے بجٹ تقریر میں پراپرٹی قیمتوں میں اضافہ روکنے اور عوام تک جائیداد کی رسائی کے لیے حکمت عملی واضح کرتے ہوئے ایک سے زائد پراپرٹی پر سالانہ ایک فیصد ٹیکس لگانے کا اعلان کر دیا۔یہ ٹیکس ڈھائی کروڑ روپے سے زائد مارکیٹ قیمت کی جائیدادوں پر وصول کیا جائے گا

Property tax 15 percent

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں