میر شکیل الرحمن کی گرفتاری کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

ملک کے دیگر بڑے شہروں کی طرح ایبٹ آباد پریس کلب کے بائر ایڈیٹر انچیف جنگ جیو میر شکیل الرحمن کی گرفتاری کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ہے، احتجاجی مظاہرین نے میر شکیل الرحمن کی گرفتاری کو آزادی اظہار رائے پر دباو قرار دیتے ہو ئے فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے ،اس موقع پر صدر پریس کلب نمائندہ جنگ محمد عامر شہزاد جدون، الیکٹرانک میڈیا ایسوسی ایشن کے صدر طاہر حسین شاہ ،جنرل سیکرٹری ہارون تنولی، ایبٹ آباد یونین آف جرنلسٹس کے فنانس سیکرٹری دلدار احمد ستی کے علاوہ دیگر ممبران بھی شریک تھے،صدر پریس کلب محمد عامر شہزاد جدون اور دیگر نے اپنے خطاب میں کہا کہ موجودہ حکومت نے میڈیا کو دباو میں رکھنے کے لئے اس طرح کے ہتھکنڈے استعمال کرنا شروع کر رکھے ہیں اور ملک کے بڑے میڈیا گروپ کے آڈیٹر انچیف کو الزام کی بنا پر گرفتار کرنا انتقامی کاروائی ہے،جس کے خلاف ملک بھر میں میڈیا سے وابستہ افراد احتجاج پر مجبور ہیں،مقررین نے اس بات پر زور دیا کہ حکومت نیب کو میڈیا کے دباو کے لئے استعمال میں نہ لائے اور انصاف کے تقاضوں کو روند کر یکطرفہ عمل سے گریز کرے ،اس موقع پر مظاہرین نے میر شکیل الرحمن کی گرفتاری کے خلاف نعرہ بازی بھی کی اور بینرز بھی اٹھا رکھے تھے جس میں میر شکیل الرحمن کی گرفتاری کی مذمت کی گئی،ایبٹ آباد پریس کلب کے بائر ہو نے والے احتجاجی مظاہرے میں موجودہ صورتحال میں سماجی فاصلے کا خیال رکھتے ہو ئے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں