: گورنر خیبر پختون خوا مشتاق احمد غنی اسلام آباد لانگ مارچ کے لئے سینکڑوں گاڑیوں کے قافلہ کے ساتھ روانہ

ایبٹ آباد : گورنر خیبر پختون خوا مشتاق احمد غنی اسلام آباد لانگ مارچ کے لئے سینکڑوں گاڑیوں کے قافلہ کے ساتھ روانہ ہوگئے۔بدھ کے روز غنی باغ سے گورنر وسپیکر خیبر پختون خوا اسمبلی مشتاق احمد غنی کی قیادت میں ایبٹ آباد سے پاکستان تحریک انصاف کا قافلہ روانہ ہوا جس میں ایم پی اے الحاج قلندر خان لودھی ،مومنہ باسط ،سابق ایم این اے ڈاکٹر اظہر خان جدون ،علی خان جدون ،پی ٹی آئی رہنما شہزاد گل اعوان کے علاوہ پارٹی کے کارکنان بھی شریک تھے۔اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مشتاق احمد غنی کا کہنا تھا ہم اپنا راستہ خود بنائیں گے ان کی بزدل پولیس ہمارے لوگوں کا سامنا نہیں کر سکے گی۔مشتاق احمد غنی کا کہنا تھا ہم پولیس سے بھی کہتے ہیں وہ ہم میں سے ہیں ہمارے بھائی ہیں وہ اس حکومت کے غیر قانونی ہتھکنڈوں میں آئے تو اس کے اپنے لئے نقصان دہ ہوگا۔ملک کے ادارے بشمول جوڈیشری فی الفور یہ فیصلہ کریں یہ کینٹینر ہٹائیں اور راستے کھلوائیں اور ہمارے گرفتار لوگوں کو جو ہزاروں کی تعداد میں ہیں انہیں رہا کریں ۔ہمیں اسلام آباد آنے دیں تاکہ ہم اپنا پرامن احتجاج کریں۔گورنر خیبر پختون خوا مشتاق احمد غنی کا کہنا تھا آپ روکیں گے کس کس شہر کو روکیں گے۔وہیں پر پرتشدد ہنگامے پھوٹ پڑیں گے۔اس کی زمہ داری اسی فاشٹ حکومت پر ہوگی۔انہوں نےوفاقی وزیر داخلہ کے بیان کے ردعمل میں کہا کہ ہمارا موازنہ کسی شریف آدمی سے کریں ۔انہوں نے تو ایک غنڈے اور بدمعاش کو وزیر داخلہ لگا دیا ہے ۔یہ بدمعاشی کرے گا کس کے ساتھ کرے گا ایک سے ،دو سے سو سے ہزار سے 22کروڑ عوام کے ساتھ یہ کیسے بدمعاشی کرےگا۔آپ اس کو اسلام آباد کی سڑکوں پر بھاگتا پھرتے دیکھیں گے ہمیں اسلام آباد تو پہنچنے دیں۔دریں اثنا گورنر خیبر پختون خوا کی قیادت میں لانگ مارچ کے قافلے کو جھاری کس اور اٹک پل پر روکنے کی کوشش کی گئی جس رکاوٹ کو عبور کرکے وہ اسلام آباد کی حدود میں داخل ہو چکے ہیں۔لانگ مارچ کے قافلہ میں نوجوانوں کا بھی جوش خروش دیدنی تھاجو ایک جذبہ سے لانگ مارچ میں شریک ہونے کے لئے رواں دواں تھے۔

PTI LONG MARCH

#pti

#longmarch

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں