وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان کی زیر صدارت پراونشل ٹورازم اسٹریٹجی بورڈ کا پہلا اجلاس۔

وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان کی زیر صدارت پراونشل ٹورازم اسٹریٹجی بورڈ کا پہلا اجلاس۔
متعلقہ صوبائی وزراء، چیف سیکرٹری، ایڈیشنل چیف سیکرٹری، متعلقہ سیکرٹریز اور دیگر ممبران کی شرکت۔
صوبے میں سیاحت کے شعبے کے فروغ کے لئے اہم پیشرفت۔
صوبے کے تین سیاحتی مقامات کو باقاعدہ اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز کا درجہ دینے کی منظوری۔
ان مقامات میں گھنول، مانکیال اور مداکلشت شامل ہیں۔
معاملہ حتمی منظوری کے لئے صوبائی کابینہ کے اجلاس میں پیش کیا جائے گا۔
گھنول اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز 489، مانکیال 450 اور مداکلشت 500 کنال اراضی پر مشتمل ہونگے۔
تینوں اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز کے ماسٹر پلانز پہلے ہی سے تیار گئے گئے ہیں۔
اگلے مرحلے میں ان اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز کے منیجمنٹ پلانز بھی تیار کئے جائیں گے۔
یہ اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز بیرونی سرمایہ کاری کو راغب کرنے کیلئے دبئی ایکسپو میں پیش کئے جائیں گے۔
ان اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز کی ریگولیشنز کی تیاری کا سارا عمل دو مہینوں میں مکمل کرکے منظوری کے لئے پیش کیا جائے، محمود خان
اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز میں جنگلات اور دریاؤں سمیت قدرتی ماحول کے مکمل تحفظ کو یقینی بنایا جائے، وزیر اعلی
اینٹگریٹڈ ٹوارزم زونز کے منیجمنٹ پلانز کی تیاری کا عمل جلد سے جلد مکمل کیا جائے، محمود خان
موجودہ حکومت صوبے میں سیاحت کو بطور صنعت ترقی دینے کے لئے مربوط حکمت عملی کے تحت کام کر رہی ہے، وزیر اعلی
سیاحت کے شعبے کو جدید بنیادوں پر ترقی دیکر لوگوں کے لئے روزگار کے مواقع فراہم کررہے ہیں ، محمود خان
#KPRisingWithMK
#خپل_وزیراعلی #لویہ_پختونخوا
#عوام_کی_خیرخواہ ۔ #حکومت_پختونخوا
#KPKUpdates

Tourism Strategy Board

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں