ملک کے اہم ماہر تعلیم واحد سراج ! تعارف

واحد سراج کا شمار ملک کے اہم ماہرین تعلیم میں ہوتا ہے۔ وہ 15 دسمبر1962 کو ایبٹ آباد میں پیدا ہوئے، پشاور یونیورسٹی سے اردو ادب میں ماسٹر کی ڈگری حاصل کے بعد امریکا سے ایم اے Tesol کیاجبکہ برطانیہ کے سٹیفورڈ ہاؤس سے ایجوکیشن مینجمنٹ میں ڈپلومہ بھی کیا۔ تعلیم کے علاوہ ادبی اور سماجی حوالے سے بھی وہ الگ پہچان رکھتے ہیں

۔شعبہ تعلیم میں ان کی خدمات کو سراہتے ہوئے محسن پاکستان ڈاکٹرقدیر خان نے نظریہ پاکستان کے زیر اہتمام منعقدہ تقریب میں انہیں ایوارڈ دیا۔ وہ اس شعبے میں دیگر درجنوں ایوارڈ وصول کرچکے ہیں۔ واحد سراج کو امریکا، برطانیہ، چین، سری لنکا، تھائی لینڈ، نیپال اور بھارت سمیت متعدد ممالک میں منعقد ہونے والی تعلیمی کانفرنسز اور سیمینارز میں شرکت کا موقع ملا۔

ایبٹ آباد میں ان کی سرپرستی میں ماڈرن ایج پبلک سکول و کالج کے نام سے معیاری تعلیمی ادارہ گذشتہ 35 سال سے تعلیم کے میدان میں فعال کردار کرر ہا ہے۔وہ پاکستان میں سٹوڈنٹس کوالٹی سرکلز کو متعار ف کرانے والی پہلی شخصیت ہیں اور اس تحریک کو ایکوئپ پاکستان کے ڈائریکٹر جنرل کی حیثیت سے گذشتہ پندرہ سال سے کامیابی کے ساتھ چلارہے ہیں؛علاوہ ازیں بزم علم و فن ہزارہ کے صدر، ایلاف کلب ایبٹ آباد کے جنرل سیکرٹری اور پاک آئرش مرکز برائے بحالی معذوراں (PIRC) کے چیف ایگزیکٹو ہیں جبکہ اینور پیشنٹس ویلفیئر سوسائٹی کے رکن کی حیثیت سے بھی صحت کے میدان میں نمایاں خدمات سر انجام دے رہے ہیں۔

واحد سراج نے 2005 ء کے زلزلے کے بعد پاک آئرش مرکز برائے بحالی معذوراں قائم کیا اور زلزلہ زدگان کی بے لوث خدمت کی۔ ایبٹ آباد میں وہ ادبی سرگرمیوں کے روح و رواں ہیں۔ حال ہی میں واحد سراج کی سرپرستی میں ہندکو زبان و ادب کے فروغ کے لیے بھی پاک اکیڈمی آف ہندکو لینگویج اینڈ لٹریچر (PAHLL) کے نام سے تنظیم قائم کی گئی۔ وہ تعلیم، صحت، ادب، ثقافت اور کھیلوں کے شعبوں میں متعدد منصوبوں پر کام کررہے ہیں جس کی بدولت خاص و عام میں قدر کی نگا ہ سے دیکھے جاتے ہیں۔

wahid-Saraj-renowned educationist

Modernage Public School & College Abbottabad
Pak Irish Rehabilitation Centre Abbottabad

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں