قومی خواتین ٹیم کا دو ہفتون پر محیط ہائی پرفارمنس کیمپ ایبٹ آباد میں اختتام پزیر

ایبٹ آباد ( طاہر منیر اعوان سے ) پاکستان کی قومی خواتین ٹیم کا بنگلہ دیش اور انگلینڈ کے خلاف شیڈول سیریز اور پاکستان کی خواتین اے ٹیم کا دورہ سری لنکا کے تیاریوں کے حوالے سے دو ہفتون پر محیط ہائی پرفارمنس کیمپ ایبٹ آباد میں اختتام پزیر ہوگیا نیوزی لینڈ سے تعلق رکھنے والے ہیڈ کوچ مارک کولز کی نگرانی میں لگائے جانیوالے اس تربیتی کیمپ مین کھلاڑیوں کی سکلز سمیت بیٹنگ باءولنگ فیلڈنگ اور فزیکل فٹنس کی بہتری پر خصوصی توجہ دی گئی ٹیم کے بیٹنگ کوچ اقبال امام نے بیٹنگ شاہد انور نے فیلڈنگ ٹرینر جمال حسین نے فزیکل فٹنس اور وقار اورکزئی نے وکٹ کیپنگ کے شعبے میں خا میوں کو دور کرنے پر خسوصی توجہ مرکوز رکھی جبکہ پاکستان جونئیرٹیم کی سلیکشن کمیٹی کے سربراہ سلیم جعفر بھی ٹیم مینجمنٹ کی معاونت کے لئے تقریبا ایک ہفتے تک ٹیم کا حصہ رہے اور سینئر اور اے ٹیموں کی فاسٹ باءولنگ کے شعبے سے منسلک کھلاڑیں کی باءولنگ میں پائی جانے والی خامیوں کو دور کرنے اور اس میں بہتری لانے پر خصوصی فوکس کیا گیا اس دو ہفتے پر محیط کیمپ میں سب سے زیادہ ٹارگیٹڈ میچز کے ذریعے کھلاڑیوں کی سکلز کی بہتری کے لئے کام کیا گیاتاکہ آئندہ آنے والی سیریز میں مضبوط ٹیم کی تشکیل کو ممکن بنایا جا سکے اسکے علاوہ سیمیٹڈ ٹرف اور درمیانی پچ پر باقاعدگی سے نیٹ پریکٹس کروائی گئی اور اس مقصد کے لئے ایبٹ آباد کے جونئیر بوائز کھلاڑیوں کی خدمات بھی حا صل کی گئیں اور ون ڈے میچز کا بھی اہتمام کیا گیا اور ساتھ ساتھ خواتین کھلاڑیوں کی فزیکل فٹنس کی بہتری کے لئے پی ٹی سکول کاکول میں کیڈٹ طرز پر ان کو ٹریننگ کے عمل سے گزارا گیا جبکہ اس پورے کیمپ کے دوران ایبٹ آباد کرکٹ سٹیڈیم کے مینجر شوکت گل جدون اور انکی پوری ٹیم کا تعاون بھبی پوری ٹیم کو حاصل رہا کیمپ کے اختتام پر ٹیم مینجمنٹ اس ہائی پرفارمنس تربیتی کیمپ کو ایک کامیاب مثبت اور کار آمد قرار دیا اور کہا کہ اس سے کھلاڑیوں کی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے اور انکی فٹنس اور کھیل کے معیار کو بہتر بنانے پر خاطر خواہ حد تک مدد ملی ہے اور ساتھ ساتھ کیمپ میں شریک خواتین کھلاڑیوں نے بھی اسے کامیاب اور مثالی کیمپ قرار دیا ہے کیمپ میں ٹیم کو پولیس سیکورٹی کا بھی بھرپور تعاون حاصل رہا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں